Home / News / ISLAMABAD, JUNE 28, 2022: NATIONAL SIMULATION EXERCISE (SIMEX)--INAUGURAL SESSION

ISLAMABAD, JUNE 28, 2022: NATIONAL SIMULATION EXERCISE (SIMEX)--INAUGURAL SESSION

 

NATIONAL DISASTER MANAGEMENT AUTHORITY 

PRESS RELEASE 

***

*National Simulation Exercise (SIMEX)--Inaugural Session*

 

Islamabad, June 28, 2022: A two-day National Simulation Exercise (SIMEX) titled “Umeed-e-Sahar” is being held at NDMA in collaboration with United Nation and Welt Hunger Hilfe (WHH) in Pakistan. Chairman NDMA Lieutenant General Akhtar Nawaz and Ms. Mio Sato, Acting United Nation Resident Coordinator jointly inaugurated the Exercise this morning.  

 

The Exercise is based on multi-hazards’ scenario which includes earthquake and floods (simulated). SIMEX is aimed at evaluating preparedness and coordination between the national and provincial disaster management authorities and humanitarian community by rehearsing coordination arrangements and emergency response at different tiers in given situations.

 

Relevant officials from NDMA, PMD, WAPDA, NHA, SUPARCO, Armed Forces, PDMAs/SDMA/GBDMA, ICT, and Emergency Response Agencies as well as UN agencies have been grouped into eleven Syndicates.

 

In his welcome note, the Chairman NDMA said that SIMEX is part of NDMA efforts towards a proactive management of disaster through disaster risk reduction, preparedness and coordinated response. He further said that the Exercise had been designed to undertake prompt assessment and response of situation while employing available resources  in a time constraint environment.

 

UNRC Ms. Mio Sato hoped that SIMEX would benefit emergency responders of all tiers to improve disaster management plans. She also drew attention towards better communication between national and international stakeholders amidst crisis/disasters. 

 

At the end of inaugural session, both wished best to the participants and expressed hope that useful lessons would be learnt from the Exercise.

---

پریس ریلیز  

 

*دو روزہ نشینل سمولیش مشق کا انعقاد*

 

اسلام آباد، 28 جون، 2022: اقوام متحدہ اور ویلٹ ہنگر ہلف (ڈبیلو ایچ ایچ) کے تعاون سے این ڈی ایم اے  "امید سحر" کے عنوان سے دو روزہ نشینل سمولیشن مشق (سائیمیکس ) کا انعقاد کر رہا ہے۔  چیئرمین این ڈی ایم اے لیفٹیننٹ جنرل اختر نواز اور اقوام متحدہ کی قائم مقام ریذیڈنٹ کوآرڈینیٹر محترمہ میو ساتو نے آج صبح مشترکہ طور پر مشق کا افتتاح کیا۔

 

 یہ مشق کثیر خطرات/ قدرتی آفات سے نمٹنے کیلئے تیار کی گئی ہے جس میں فرضی سیلاب اور زلزلے کی صورت میں رسپانس پر مبنی مشق کروائی جائے گی۔ 

 

 سائیمکیس کا مقصد ہنگامی صورتحال میں قومی اور صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹیز، اور ایمرجنسی میں کام کرنے والی تنظیموں کے درمیان ہم آہنگی اور مختلف سطح پر ایمرجنسی رسپانس کی تیاری کرنا ہے. 

 

 مشق کو سر انجام دینے کیلئے این ڈی ایم اے، محکمہ موسمیات، واپڈا، این ایچ اے، سپارکو، مسلح افواج، پی ڈی ایم ایز، ایس ڈی ایم اے، جی بی ڈی ایم اے، آئی سی ٹی اور ایمرجنسی رسپانس کے محکموں کے ساتھ ساتھ اقوام متحدہ کے اداروں کے متعلقہ حکام کی گیارہ سنڈیکیٹس میں گروپ بندی کی گئی ہے.

 

 اپنے خیرمقدمی ریمارکس میں، چیئرمین این ڈی ایم اے نے کہا کہ سائیمکیس این ڈی ایم اے کی ان کاوشوں کا حصہ ہے، جن کے ذریعے آفات کے خطرے میں کمی، تیاری اور مربوط ردعمل کے ذریعے آفات سے نمٹنے کیلئے فعال انتظام پر توجہ مرکوز کی جا رہی ہے۔  انہوں نے مزید کہا کہ مشق کو ایمرجنسی صورتحال کا فوری جائزہ لینے، وقت کی قلت کو مدنظر رکھتے ہوئے اور دستیاب وسائل کو بروئے کار لاتے ہوئے رسپانس دینے کے لیے مرتب کیا گیا ہے۔

 

دوران خطاب، اقوام متحدہ کی ریزیڈنٹ کوڈینیٹر محترمہ میو ساتو نے امید کا اظہار کیا کہ اس مشق کے ذریعے ڈیزاسٹر مینجمنٹ پلان اور ایمرجنسی رسپانس کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے بحران/ آفت کے دوران قومی اور بین الاقوامی اسٹیک ہولڈرز کے درمیان بہتر رابطے کی طرف بھی توجہ مبذول کروائی۔

 

 افتتاحی سیشن کے احتتام پر، دونوں نے شرکاء کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا اور امید ظاہر کی کہ اس مشق سے تمام متعلقہ اداروں کو سکھینے کا موقع ملے گا۔

 ---