Home / News / ISLAMABAD, 27-05-2022: PAK-CHINA MEETING ON COOPERATION TO MANAGE FOREST FIRE HAZARD

ISLAMABAD, 27-05-2022: PAK-CHINA MEETING ON COOPERATION TO MANAGE FOREST FIRE HAZARD

Government of Pakistan

Prime Minister’s Office

National Disaster Management Authority

Islamabad

*

 

Press Release

Pak-China Meeting on Cooperation to manage Forest Fire hazard 

Islamabad, 27-05-2022: Under the framework of Pak-China cooperation on disaster management, a high level delegation (online) meeting was held today, with the view to explore possibilities of cooperation between the two countries on managing forest fires hazards. 

Pakistan’s delegation was led by Lieutenant General Akhtar Nawaz, Chairman NDMA and Mr. Liu Weimin, Director General of the Department of International Cooperation & Rescue, Ministry of Emergency Management headed the Chinese delegation. Chairman NDMA was assisted by Members of NDMA, Joint Secretary EAD, DG Punjab emergency service 1122, DG Civil Defense, DIG Forests Ministry of Climate Change during the meeting.  

From Chinese side Emergency Command Commissioner, Department of Fire Prevention & Control, Deputy Head of Fire Rescue Department, Deputy Director General of National Forest Fire Prevention & Early Warning Information Centre, Expert National Forest & Grassland Fire Prevention & Extinguishing Command and Director of Satellite Emergency Monitoring of Forest Fires participated in the discussion.

The Chinese side was briefed by NDMA on the overall challenges of forest fires in Pakistan while specifically informed on the recent fires in Pine Nut forest of Koh-e- Suleman Range Balochistan. The Chinese side was also informed of the capacity gaps and potential areas for technical assistance and cooperation particularly in the use of modern technologies for early warning, mitigation and response to forest fires

Mr. Liu Weimin, while appreciating the efforts of government of Pakistan in successfully controlling forest fire in Balochistan offered their support in establishing joint monitoring systems, early warning mechanisms through use of satellite technology and resource sharing for response. 

On the proposal of Chairman NDMA both sides agreed to establish a Joint Working Group comprising of experts/officials from both sides for exploring areas of cooperation and working out details of such collaboration, as a way forward.

******************************

 

نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی 

پریس ریلیز

 جنگلات میں آگ کے خطرے سے نمٹنے کے لیے باہمی تعاون پر پاک چین میٹنگ 

 

اسلام آباد27مئی2022 

ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے حوالے سے پاک چین تعاون فریم ورک کے تحت اعلیٰ سطحی وفد کی آن لائن میٹینگ کا انعقاد ہوا جس کا مقصد جنگلات میں لگنے والی آگ کے خطرات سے نمٹنے کے لیے باہمی تعاون کے امکانات کا جائزہ لینا تھا۔

پاکستان کی جانب سے وفد کی قیادت چئیرمین این ڈی ایم اے لیفٹیننٹ جنرل اختر نواز نے کی جبکہ چینی وفد کی سربراہی بین الاقوامی تعاون اور ریسکیو ڈیپارٹمنٹ کے ڈائریکٹر جنرل مسٹر لیو ویمن نے کی۔

 اجلاس میں چیئرمین این ڈی ایم اے کی معاونت ممبران این ڈی ایم اے ، جوائنٹ سیکرٹری ای اے ڈی، ڈی جی پنجاب ایمرجنسی سروس 1122، ڈی

 جی سول ڈیفنس، ڈی آئی جی جنگلات وزارت موسمیاتی تبدیلی نے کی۔

 جبکہ چین کی جانب سے ایمرجنسی کمانڈ کمشنر، فائر پریوینشن اینڈ کنٹرول ڈیپارٹمنٹ، ڈپٹی ہیڈفائر ریسکیو ڈیپارٹمنٹ ، نیشنل فارسٹ فائر پریوینشن اینڈ ارلی وارننگ انفارمیشن سنٹر کے ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل، ماہر نیشنل فارسٹ اینڈ گراس لینڈ فائر پریوینشن اینڈ ایکسٹنگوئشنگ کمانڈ اور ڈائریکٹر سیٹلائٹ ایمرجنسی جنگلات نے اجلاس میں حصہ لیا۔

این ڈی ایم اے کی جانب سے چینی وفد کو پاکستانی جنگلات میں ہونے والی آتشزدگی سے درپیش مجموعی چیلنجز بالخصوص کوہ سلیمان رینج بلوچستان میں موجود چلغوزے کے جنگلات میں لگنے والی حالیہ آگ پر بریفنگ دی گئی. اس ضمن میں چینی وفد کوجنگلات میں آتشزدگی کے ممکنہ خطرات  کے تدارک، تکنیکی  شعبوں میں درپیش مشکلات،  جن میں جدید ٹیکنالوجی سے لیس قبل از وقت وارننگ اور دیگر سسٹم شامل ہیں، کی ضرورت کے بارے میں بھی آگاہ کیا گیا. 

 

مسٹر لیو ویمن نے بلوچستان میں  ہونے والی آتشزدگی پر کامیابی سے قابو پانے میں حکومت پاکستان کی کاوشوں کو سراہا اور بزریعہ سیٹلائٹ ٹیکنالوجی قبل از وقت وارننگ، مشترکہ نگرانی کے نظام اور فوری ریسپانس کے حوالے سے مکمل تعاون کی پیشکش کی۔

اس موقع پر چیئرمین این ڈی ایم اے کی تجویز پر اتفاق کرتے ہوئے دونوں ممالک کے ماہرین پر مشتمل جوائنٹ ورکنگ گروپ کی تشکیل کی بنیاد رکھی گئی تاکہ اس سلسلے کو آگے بڑھایا جا سکے.